ایشیا کپ کے سپر فور مرحلے میں بھارت نے پاکستان کو 9 وکٹوں سے ہرا دیا۔

Asia Cup
12

مانیٹئرنگ ڈیسک (24 گھنٹے)

Asia Cup

متحدہ عرب امارات میں جاری ایشیا کپ کے سپر فور مرحلے میں بھارت نے پاکستان کو 9 وکٹوں سے ہرا دیا۔

بھارتی بلے بازوں نے پراعتماد انداز میں بلے بازی کرتے ہوئے پاکستان کا 238 رنز کا ہدف ایک وکٹ کے نقصان پر 40ویں اوور کی تیسری گیند پر باآسانی عبور کر لیا۔

پاکستان کے 238 رنز کے ہدف کے تعاقب میں بھارت کی جانب سے کپتان روہت شرما اور شکھر دھاون نے اننگز کا آغاز کیا۔ بھارت نے 37 اوورز میں ایک وکٹ کے نقصان پر 229 رنز بنا لیے ہیں۔ بھارت کے پہلے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی شکھر دھاون ہیں جو 114 سکور بنا کر رن آؤٹ ہوئے۔  بھارت ہدف کے قریب ہے اور اس کے بلے باز کافی پراعتماد انداز میں بلے بازی کر رہے ہیں۔

ابتدائی اوورز میں پاکستان کی جانب سے فیلڈنگ میں ناقص کاکردگی کا مظاہرہ کیا گیا اور بھارتی اوپنرز کے 2 آسان کیچ ڈراپ کر دیے گئے جبکہ 28ویں اوور میں محمد شاداب کی گیند پر روہت شرما کا کیچ ڈراپ ہوا۔

اس سے قبل قومی ٹیم نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا تو امام الحق اور فخر زمان نے محتاط انداز میں اننگز کا آغاز کیا۔ تاہم اوپنر امام الحق آٹھویں اوور میں 24 کے مجموعی سکور پر 10 رنز بنا کر چاہل کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوگئے جبکہ فخر زمان 55 کے مجموعی سکور پر 31 رنز بنا کر کلدیپ یادیو کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔

پاکستان کے تیسرے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی بابراعظم تھے جو 9 سکور بنا کر رن آؤٹ ہوئے۔ 165 کے مجموعی سکور پر کپتان سرفراز 44 رنز بنا کر کلدیپ یادیو کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے، سرفراز نے مشکل وقت میں شعیب ملک کیساتھ ملکر شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کیا۔ پاکستان کی جانب سے پانچویں آؤٹ ہونیوالے کھلاڑی شعیب ملک تھے جنہوں نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے 90 گیندوں پر 78 رنز بنائے اور ٹیم کو مستحکم پوزیشن پر لانے میں اہم کردار ادا کیا۔ شعیب ملک بھمرا کی گیند پر وکٹ کے پیچھے کیچ آؤٹ ہوئے۔ شعیب ملک کے آؤٹ ہونے سے ٹیم کو بڑا نقصان ہوا ہے اور بیٹنگ سست روی کا شکار ہوگئی۔

211 کے مجموعی سکور پر پاکستان کی چھٹی وکٹ گری جب آصف علی 30 رنز بنا کر چاہل کی گیند پر کلین بولڈ ہوئے، انہوں نے کافی جارحانہ انداز میں بلے بازی کی۔ شاداب 10 سکور بنا کر بڑی شارٹ کھیلنے کے چکر میں بھمرا کی گیند پر کلین بولڈ ہوئے۔ محمد نواز اور حسن علی بلترتیب 15 اور 2 سکور بنا کر ناقابل شکست رہے۔

پاکستان کی جانب سے کامیاب ترین بلے باز شعیب ملک رہے جنھوں نے 78 رنز بنائے۔ شعیب ملک اور سرفراز احمد کے درمیان 107 رنز کی شراکت بھی رہی۔ بھارت کی جانب سے کلدیپ اور بھمرا نے 2،2 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

ٹاس جیت کر قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ وہ پچھلے میچ کو بھلا کر نئے میچ میں نئے جذبے سے میدان میں اترنا چاہتے ہیں اور ان کی کوشش ہوگی کہ اس میچ میں کامیابی کے بعد ٹورنامنٹ میں بھی کامیابی حاصل کریں۔ بڑے مقابلے کو دیکھنے کے لیے شائقین کرکٹ کی بڑی تعداد سٹیڈیم میں موجود تھے۔


پاکستان نے آج کے میچ کیلئے ٹیم میں دو تبدیلیاں کی ہیں۔ حارث سہیل اور عثمان خان کی جگہ محمد عامر اور شاداب خان ٹیم میں واپس آ گئے ہیں۔ قومی ٹیم فخر زمان، امام الحق، بابراعظم، شعیب ملک، کپتان سرفراز احمد، آصف علی، شاداب خان، محمد نواز، شاہین آفریدی، حسن علی اور محمد عامر پر مشتمل ہے۔

ھارت نے آج کے میچ کے لیے اپنی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی۔ بھارتی ٹیم میں شکھر دھاون، کپتان روہت شرما، امباتی روئیڈو، مہندرا سنگھ دھونی، دنیش کارتھک، کیدر جادیو، روندرا جدیجا، بھونیشور کمار، کلدیپ یادیو، یوزویندرا چاہل اور جیسپرٹ بھمرا شامل ہیں۔

ایشیا کپ 2018 کے پہلے مرحلے میں پاک بھارت کے درمیان کھیلے گئے میچ میں بھارت کامیاب ہوا تھا۔ اب تک بھارت اور پاکستان کے درمیان کل 130 ایک روزہ میچ کھیلے گئے ہیں جن میں سے 53 بھارت جبکہ 73 پاکستان کے حق میں گئے ہیں۔ ایشیا کپ میں پاکستان بھارت سے 5 مقابلے جیت چکا ہے جبکہ بھارت نے 6 میں کامیابی حاصل کی ہے

جواب چھوڑیں