نیازی صاحب ! جیلوں سے نہ ڈراؤ، میں نے مشرف دور کا احتساب 10 سال بھگتا ہے حمزہ شہباز

Pic06-049 LAHORE: Apr06- Opposition leader in the Punjab Assembly Hamza Shahbaz addressing to the party activists after the five-hour standoff outside the house, the NAB team returned around 4pm after the Lahore High Court (LHC) issued a short order, granting interim bail to Hamza until April 8. According to the high court's written order, and interim protective bail has been granted to Hamza "in order to enable the petitioner to approach" the concerned bench for the hearing of a bail plea that was filed on April 4 at Model Town. ONLINE PHOTO by Sajid Rana
2

مانیئٹرنگ ڈیسک لاہور(24 گھنٹے )

Another Attempt

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما و پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز نے کہا ہے کہ قوم میں شعور بیدار ہورہا ہے اور کارکن سیسہ پلائی دیوار کی طرح یہاں کھڑے ہیں، ہمارے کارکن ہمارا سرمایہ ہیں اور ان کی دل سے عزت کرتا ہوں۔

وہ  گرفتاری کے لیے آنے والی نیب ٹیم کی واپسی کے بعد اپنی رہائش گاہ پر کارکنوں سے خطاب کررہے تھے

انہوں نے کہا کہ آج پاکستان میں آئین اور قانون کی فتح ہوئی ہے، نوازشریف نے اپنی بیمار اہلیہ کو اللہ کے حوالے کرکے پاکستان میں کیسز کا سامنا کیا اور ان پر ایک پائی کی کرپشن ثابت نہ ہوسکی۔

انھوں‌ نے کہا کہ عدالتوں کا احترام کرتا ہوں، حکم نامہ میرے پاس ہے، آپ اور مجھے مل کر قانون کا احترام کرنا چاہیے، عمران خان!کھلےالفاظ میں آپ کو بتادینا چاہتا ہوں، آپ مجھے گرفتارنہیں کرسکتے.

 وزیراعظم عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے  کہنا ہے کہ نیازی صاحب ! جیلوں سے نہ ڈراؤ، میں نے مشرف دور کا احتساب 10 سال بھگتا ہے

ان کا کہنا ہے کہ تمام تر تحفظات کے باوجود ہم نیب کے سامنے پیش ہوئے اور نیب نے عدالت میں لکھ کر دیا تھا کہ حمزہ شہباز سب سے زیادہ تعاون کررہے ہیں، میں عدالتوں کا احترام کرتا ہوں، عدالت کا حکم نامہ میرے پاس ہے اور قانون کی حکمرانی کے لیے عدالتی فیصلے کا احترام کرنا چاہیے، آپ مجھے گرفتار نہیں کرسکتے۔

حمزہ شہباز کا کہنا تھا کہ ظلم وہ کرتے ہیں جو دیواریں پھلانگ کر داخل ہوتے ہیں اور لوگوں کو محبوس کرتے ہیں، آج میں ڈرا ہوا ہوں تو اس کی وجہ ملک کے معاشی حالات ہیں، نیازی صاحب، آپ نے عوام کے منہ سے آپ نے نوالہ چھین لیا۔

انہوں نے کہا کہ سیاسی لڑائی کے لیے عمر پڑی ہے،  ڈالر کی قیمت آج پاکستانی معیشت پر سوالیہ نشان لگارہی ہے، آؤ میثاق جمہوریت پر بات کرو، اپوزیشن عوام کی خاطر اپنا کردار ادا کرے گی۔

جواب چھوڑیں